sufi saint

میں ان لوگوں کو حلفیہ یہ خوشخبری سناتا ہوں جو ناحق جیلوں میں بند ہیں یا وہ لوگ جو ناحق مقدموں کی وجہ سے مفرور ہو کر ڈاکو بن گئے یا جو سیاسی انتقام کی بنا پر ملک چھوڑنے پر مجبور ہوگئے۔۔۔کہ عنقریب وقت آنے والا ہے کہ اس ملک پاکستان میں کسی درویش کی حکومت ہوگی۔ بکری اور شیر ایک ہی جگہ پانی پئیں گے۔ سکون ہوگا، امن ہوگا، اور انصاف ہوگا، اور ہر کوئی خوشحال ہوگا۔
ذمہ دار کرسیوں پر خدا ترس اور درویش ہی بیٹھیں گے۔ ا تنامیرے علم میں ہے کہ یہ انگریز قانون اور جیلیں ختم کردی جائینگی۔تاوان، قصاص، اور جرمانے یا غلامی کے بعد تمام قیدی رہا کردیئے جائینگے اوریا تو کوڑے مار کر فارغ، یا ہاتھ کاٹ کر فارغ، یا پھر سنگسار کردیئے جائینگے۔ جیلوں کی ضرورت ہی نہیں پڑے گی۔

یہ سخت قانون امن کا باعث بنے گا۔

سلطان الفقر

حضرت سیدنا ریاض احمد گوہر شاہی
16 09 2000

          پیرومرشد حضرت سیدنا ریاض احمد گوہر شاہی مدظلہ العالیٰ ایک کامل صوفی بزرگ اور عظیم روحانی شخصیت ہیں۔حضرت گوہر شاہی کا اللہ واحد ہ لاشریک کی توحید اور نبی آخرازماں احمد مجتبیٰ حضرت محمد مصطفیٰ ﷺ کی ختم ِ نبوت پر کامل ایمان ہے۔حضرت گوہر شاہی کے نزدیک آقائے دو عالم حضرت محمد مصطفیٰ ﷺ کے بعد نبوت کا دعویدار کافر و زندیق ہے۔حضرت گوہر شاہی نے کبھی امام مہدیؑ ہونے کا دعویٰ نہیں کیا اور آپ کے نزدیک امام مہدی کا جھوٹا دعویٰ کرنے والا سخت گمراہ اور بدبخت ہے۔جبکہ حضرت گوہر شاہی نے اصل امام مہدی کی نشانیاں واضح کردی ہیں (جسطرح سے نبی پاک ﷺ کی پشت مبارک پرمہرِ نبوت تھی اسی طرح امام مہدی کی پشت مبارک پر کلمے کے ساتھ مہرِ مہدیت ہوگی جوکہ نسوں سے ابھرتی ہوگی) اور انکی پہچان نور سے ہوگی لہذا اپنے دلوں میں اللہ کا نور کو پیدا کریں۔

مقامی اخبارات میں حضرت گوہر شاہی کیطرف سے دی گئی پریس ریلیز